شاپنگ صحت سے زیادہ ضروری نہیں، جلوس والوں کیخلاف پولیس کو کارروائی کے لیے لکھ چکے ہیں، ڈی سی کوئٹہ

کوئٹہ: ڈپٹی کمشنر کوئٹہ میجر ریٹائرڈ اورنگزیب بادینی نے کہا ہے کہ لوگوں کے مجمع کو کوئٹہ کے حالات کا فیصلہ کرنے کی اجازت نہیں دے سکتے ماہرین صحت کی جانب سے جاری ہدایات پر عمل درآمد کیا جاتا ہے جن سیاسی و مذہبی اجتماعات اور جلوسوں کا حوالہ دیا جارہا ہے ان کے خلاف پولیس کو کارروائی کے لئے لکھ چکے ہیں حکومت اور انتظامیہ کے ساتھ ساتھ عوام کی بھی ذمہ داری ہے کہ وہ ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد یقینی بنائیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے بیان میں کیا انہوں نے کہا کہ لوگوں کے ایک مجمع کو کوئٹہ کے حالات کا فیصلہ نہیں کرنے دے سکتے نیشنل کمانڈ آپریشن سینٹر کے ماہرین صحت کی جانب سے دی جانے والی ہدایات پر عملدرآمد کرایا جاتا ہے ایسے میں کسی بھی سیاسی‘ مذہبی یا سماجی اجتماعات نامناسب ہیں عوام گھر پر رہیں اور محفوظ رہیں انہوں نے کہا کہ اعتراضات کے بجائے ہمیں اپنی صحت کے بارے میں سوچنا چاہئے جن سیاسی و مذہبی اجتماعات جلوسوں کا حوالیہ دیا جارہا ہے ضلعی انتظامیہ کی جانب سے ان کے خلاف پولیس کو کارروائی کے لئے لکھ چکے ہیں موجودہ حالات شکایات نہیں بلکہ مہذب رائے کی ہے ایسی رائے جو کوئٹہ کے عوام کے حق میں ہو انہوں نے کہا کہ شاپنگ کرنا عوام کی صحت سے زیادہ ضروری نہیں ہے حکومت اور انتظامیہ کیساتھ عوام پر بھی ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ ایس او پیز پر عملدرآمد کرے انہوں نے کہاکہ کوئٹہ کے بولان میڈیکل کمپلیکس‘شیخ زید ہسپتال‘ ہیلپرآئی ہسپتال‘ فاطمہ جناح جنرل جیسٹ ہسپتال‘ مفتی محمود میموریل ہسپتال کچلاک‘ بینظیربھٹو ہسپتال اور سول ہسپتال میں عوام کورونا کی ویکسین کرواسکتے ہیں عوام الناس کی سہولت کے لئے 1122 سروس کا آغاز کر دیا گیا ہے حکومت بلوچستان اور ضلعی انتظامیہ کی جانب سے کورونا کی تیسری لہر میں ٹیسٹ کے لئے 1122پر کال کریں میڈیکل ایمرجنسی رسپانس سینٹر کی ٹیم آپ کے گھر سے کورونا ٹیسٹ کے نمونے حاصل کریں گے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں