شاہ محمود قریشی کا انسٹیٹیوٹ آف ریجنل اسٹڈیز کا دورہ، کار کر دگی کو سراہا

اسلام آباد:وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ ہمیں خارجہ محاذ پر درپیش چیلنجز کو سامنے رکھتے ہوئے بین عالمی سطح کی تحقیق کو منظرعام پر لانا ہوگا، تیزی بدلتے ہوئے، عالمی منظر نامے میں ہمیں،درپیش چیلنجز کا مقابلہ کرنے کیلئے بہترین حکمت عملی وضع کرنا ہو گی۔ بدھ کو وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی اسلام آباد میں واقع انسٹیٹیوٹ آف ریجنل اسٹڈیز پہنچے تو پریزیڈنٹ آئی آر ایس، ایمبیسڈر ندیم ریاض نے ان کا خیر مقدم کیا،پریزیڈنٹ انسٹیٹیوٹ آف ریجنل اسٹڈیز ایمبیسڈر ندیم ریاض نے وزیر خارجہ کو انسٹیٹیوٹ کی کارکردگی کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی۔وزیر خارجہ نے اس موقع پر آنسٹیٹوٹ آف ریجنل اسٹڈیز سے وابستہ محققین سے ملاقات کی اور تبادلہ خیال کیا۔شاہ محمود قریشی نے کہاکہ انسٹی ٹیوٹ آف ریجنل اسٹڈیزکی ذمہ داریوں میں کئی گنا اضافہ ہوچکا ہے۔ انہوں نے کہاکہ ہمیں خارجہ محاذ پر درپیش چیلنجز کو سامنے رکھتے ہوئے بین عالمی سطح کی تحقیق کو منظرعام پر لانا ہوگا۔انہوں نے کہاکہ ہم، وزیر اعظم عمران خان کے وژن کی روشنی میں اقتصادی ترجیحات پر توجہ مرکوز کیے ہوئے ہیں، آج بدلتی ہوئی علاقائی صورتحال ہماری خصوصی توجہ کی متقاضی ہے۔انہوں نے کہاکہ تیزی بدلتے ہوئے، عالمی منظر نامے میں ہمیں،درپیش چیلنجز کا مقابلہ کرنے کیلئے بہترین حکمت عملی وضع کرنا ہو گی اس حوالے سے تھنک ٹینکس اور محققین کا کردار، خصوصی اہمیت کا حامل ہے، اس تحقیقی ادارے کو مزید فعال بنانے اور جدید تقاضوں سے ہم آہنگ بنانے کیلئے ہر ممکن کوشش اور وسائل بروئے کار لانے کیلئے پرعزم ہیں، مخدوم شاہ محمود قریشی۔وزیر خارجہ نے انسٹیٹیوٹ آف ریجنل اسٹڈیز کے مختلف شعبوں کا دورہ کیا اور پریذیڈنٹ انسٹیٹیوٹ کی کارکردگی کو سراہا،وزیر خارجہ نے انسٹیٹیوٹ آف ریجنل اسٹڈیز کے دورے کے اختتام پر "وزیٹرز بک” میں اپنے تاثرات قلمبند کئیے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں