ملک عالمی طور پر تنہائی کا شکار ہوچکا ہے،پشتونخواہ میپ

کوئٹہ: پشتونخواملی عوامی پارٹی کے مرکزی پریس ریلیز میں نااہل ناکام مسلط سلیکٹڈ حکومت کی جانب سے ملک کی معاشی دیوالیہ پن اور روزانہ کے حساب سے ملک کے 22کروڑ عوام پر سخت ترین گرانی، بدترین بیروزگاری اور ملک کی بربادی کے قوانین مسلط کرنے پر انتہائیء دکْھ وافسوس کا اظہار کرتے ہوئے ضمنی بجٹ کو کھلی طور پر مسترد کیا گیا ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ 350ارب عوام سے ناروا ٹیکسوں کی مد میں وصولی پہلے سے فاقہ زدہ عوام کی حالت بدترکرنے کے ناروا اقدام پرحکومتی بے بنیاد دلائل اور طفل تسلیاں جاری ہیں ملکی وقار داؤ پر لگ گیا ہے ملک عالمی طور پر تنہائی کا شکار ہوچکا ہے اور اندرونی طور پر معاشرتی انتشار اور سخت بے چینی پائی جاتی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ زرعی، صنعتی پیداوار گھٹ کر نصف پر آچکا ہے اندرونی ملکی سرمایہ دار پر خوف طاری ہے اور بیرونی سرمایہ دار عدم تحفظ کی وجہ سے ملک کی طرف رجوع کرنے سے کتراتے ہیں،ڈالر کی قیمت بڑھ رہی ہے اور ملکی کرنسی کی حیثیت گھٹ رہی ہے جو ایک کھلی بربادی کی نشاندہی کے سوا کچھ نہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ تیل، گیس، بجلی اور اشیاء ضروریات وخوردونوش کی قیمتوں میں بے تحاشا اضافے سے عوام کی قوت خرید ختم ہوچکی اور ان کی زندگی اجیرن ہوگئی ہے عوام میں مہنگائی اور بیروزگاری کی وجہ سے خودکشیاں جاری ہیں اور صورتحال قابو سے باہر ہوتی جارہی ہے، مسلط حکومتی ٹیم پارلیمانی، ملکی اور معاشرتی اعلیٰ اقدار کی پائمالی اور گالم گلوچ میں مصروف ہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ بربادی کی اس سنگین صورتحال کے مد نظر مسلط نااہل اور ناکام ٹولے کو اپنی ناکام تسلیم کرتے ہوئے گھر جانا چاہیے اور اقتدار جو کہ عوام کی امانت ہے اسے ملک کے عوام کے حوالے کرنا چاہیے تاکہ ملک کی سیاسی جمہوری عوام دوست پارٹیاں اور ان کی عوامی لیڈر شپ ملک اور عوام کو بربادی کی اس صورتحال سے نجات دلانے اور ملک کو ترقی اور خوشحالی کی راہ پر گامزن کرنے کی ذمہ داری پورا کرسکیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں