کرونا کے معاملے پر ڈبلیو ایچ او چھوڑ کر امریکہ پاور گیم کھیل رہا ہے: چین

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) سے دستبرداری کے فیصلے کے بعد چین نے اپنے ردعمل میں امریکہ پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسے پیچھے ہٹنے کی عادت ہے۔ چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان ژاؤ لیجیان نے پیر کو بریفنگ کے دوران واشنگٹن پر الزام لگایا کہ ڈبلیو ایچ او کے ساتھ اپنے تعلقات منقطع کر کے امریکہ ‘پاور گیم’ کھیل رہا ہے۔چینی ترجمان نے مزید کہا کہ عالمی برادری امریکہ کے خود غرضانہ رویے سے اتفاق نہیں کرتی۔صدر ٹرمپ نے گذشتہ جمعے کو ڈبلیو ایچ او پر یہ الزام لگاتے ہوئے عالمی تنظیم سے دستبرداری کا اعلان کیا تھا کہ وہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے حوالے سے چین کا احتساب کرنے میں ناکام رہا ہے۔کرونا وبا کے بعد دونوں ممالک کے مابین تناؤ بڑھ رہا ہے اور بیجنگ اور واشنٹگٹن دونوں نے ایک دوسرے پر سنگین الزامات عائد کیے ہیں۔
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے یہ الزام لگاتے ہوئے عالمی ادارہ صحت سے دستبرداری کا اعلان کیا تھا کہ وہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے حوالے سے چین کا احتساب کرنے میں ناکام رہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں