کیچ میں تمام سرکاری محکموں کی کارکردگی غیر تسلی بخش ہے، لالہ رشید دشتی

تربت:بلوچستان عوامی پارٹی کے رکن صوبائی اسمبلی لالہ رشید دشتی نے ضلع کیچ میں تمام سرکاری محکموں کی کارکردگی کو غیر تسلی بخش قرار دیتے ہوئے کہا ہے ان نااہل افسران کے خلاف وزیر اعلیٰ سے شکایت اور تجربہ کار افسران تعینات کرانے کے لیئے بات کروں گا کیوں کہ صوبائی حکومت کی تمام تر کوششوں کے باوجود محکموں کے افسران حکومت کی بہترین نمائندگی کرنے سے قاصر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ضلع کیچ میں سرکاری محکمے افسران کی کمزوری اور نا تجربہ کاری کے باعث بہتر کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کررہی ہیں بلکہ افسران کی کمزوری سے بیشتر محکمے غیر فعال ہیں،انہوں نے کہا کہ ضلع کیچ میں صوبائی حکومت کی تمام تر بہتر اقدامات، ترقی، فلاح و بہبود اور خوشحالی کے پروگرامات یہاں کے نااہل سرکاری افسران کی کمزوریوں کی وجہ سے ثمر آور نہیں ہورہی ہیں، ان کی نااہلی سے سرکاری محکمے غیر فعال ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پورے ضلع میں صرف ڈی سی کیچ اور ڈی پی او کی کارکردگی تسلی بخش اور یہ دونوں اپنی پوزیشن پر بہتریں ذمہ داری کا مظاہرہ کررہے ہیں ان کے علاوہ دیگر تمام محکموں کے افسران انتہائی نااہل اور کمزور ہیں ان کی کمزوریوں اور نالائقیوں سے صوبائی حکومت کی تمام تر مفاد عامہ کی کوششوں پر لوگوں کو تسلی نہیں ہورہی حالانکہ ایک مختصر مدت کے دوران ضلع کیچ میں صوبائی حکومت نے بے تحاشا کام کیئے جن کی مثال کہیں نہیں ملتی، پہلی بار صوبائی حکومت کی طرف سے دور دراز دیہی علاقوں میں فلاحی اسکیمات شروع کیئے گئے ہیں جبکہ پسماندہ علاقوں میں بھی جنہیں ہر دور میں حکومتوں نے نظر انداز کیا وہاں سڑکوں، بنیادی صحت کے مراکز اور واٹر سپلائی اسکیمیوں پر تیزی سے کام جاری ہے لیکن ان سب کے باوجود محکموں میں افسران کی کارکردگی صرف ہے اور ان کی وجہ سے حکومت کے اٹھائے گئے اقدامات پر لوگوں کو تسلی نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ضلع کیچ میں پہلے ہی سرکاری نااہل افسران کا بوجھ برداشت سے باہر تھا ان کے اوپر ایریگیشن کا ایک نا اہل افسر تعینات کیا گیا ہے جن کی وجہ سے مذید ابتری اور بے چینی پھیل جانے کا امکان ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں