پی ایس ڈی پی میں ترقیاتی اسکیموں کے سودے ابھی سے شروع ہوچکے ہیں،پشتونخوامیپ

کو ئٹہ؛پشتونخواملی عوامی پارٹی کے صوبائی پریس ریلیز میں کہا گیا ہے کہ موجودہ صوبائی حکومت کی جانب سے ترقیاتی اسکیمات کی منظوری اور ٹینڈرنگ کے مرحلے میں قبولیت(Acceptance)اور کمیشن کے نام پر نئے نرخوں کے ساتھ کرپشن کی شروعات ہوگئی ہے جو کہ تمام پروجیکٹس میں 50فیصد ہے اور اس طرح کمیشن کے نام پر کرپشن کی بنیادوں کو مزید مضبوط اور وسیع کرتے ہوئے لوٹ مار کی حد کردی ہے ۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ پی ایس ڈی پی میں ترقیاتی اسکیموں کے سودے ابھی سے شروع ہوچکے ہیں اور عوامی خدمت کے نام پر عوامی فنڈ اور عوامی خزانے کو لوٹنے کے منصوبے بن رہے ہیں اور جن افراد اور گروہوں کو ترقیاتی اسکیموں کی مد میںفنڈز دیئے گئے ہیںان سمیت تمام ترقیاتی اسکیموں کی ٹینڈرنگ اور منظوری پر 50فیصد کی کمیشن کا فارمولہ لاگو ہوگا۔ بیان میں مسلط صوبائی حکومت ، صوبائی وزیر اعلی اور ان کے اتحادیوں کی اس عوام دشمن پالیسی اور عوام دشمن اقدام کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ اس پشتون بلوچ صوبے کے تمام غیور عوام اور سیاسی جمہوری قوتیں اس لوٹ مار اور عوامی خزانے کو لوٹنے کی اجازت کسی بھی صورت نہیں دیگی اور اس سلسلے میں ہر سطح پر بھرپور مہم چلا کر مسلط صوبائی حکومت ، مسلط وزیر اعلی اور ان کے اتحادیوں کی عوام دشمنی پر مبنی جاری طرز عمل کی روک تھام کیلئے کسی بھی کی قربانی سے دریغ نہیں کریگی۔ بیان میں سیاسی جمہوری قوتوں ،مختلف مکتبہ فکر کے تنظیموں اور سول سوسائٹی سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ مسلط صوبائی حکومت ان کے وزیر اعلی اور ان کے اتحادیوں کی 50فیصد کے فارمولے کے تحت ترقیاتی اسکیموں کی منظوری کے نام پر لوٹ مار کے خلاف آواز بلند کرے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں