چمن اور طور خم افغان بارڈ کو یک طر فہ تجارت کیلئے کھول دیاگیا

چمن:چمن اور طورخم افغان بارڈ کو یک طر فہ تجارت کیلئے کھول دیاگیا چمبر آف کامرس کے مطابق 100گاڑیوں پر مشتمل اشیاء خوردنوش کے گاڑیاں پاکستان سے افغانستان ہفتے میں 3دن جاسکے گی سوموار بدھ اور آج بھی 100گاڑیاں افغانستان جائیں گی

وفاقی حکومت کی ہدایت پر خیبر اور چمن کے راستے پاک افغان یکطرفہ ٹریڈ بحال کردی گئی، خیبر میں طورخم اور چمن میں باب دوستی کے مقام سے ٹرک، کنٹینر اور کارگو گاڑیاں افغانستان میں داخل ہوئیں۔افغان حکومت کی درخواست پر پاکستانی حکومت نے ہفتے میں تین دن یکطرفہ ٹریڈ بحال کردی ہے، ڈپٹی کمشنر ضلع خیبر کے مطابق طورخم سرحد باب پاکستان کے مقام سے ٹرانزٹ کارگو گاڑیوں کیلئے کھول دی گئی ہیں۔لاک ڈاؤن کے باعث پھنسی 34 گاڑیاں افغانستان میں داخل ہوگئی ہیں، پاکستانی ڈرائیورز کارگو گاڑیاں سرحد پار افغان ڈرائیور کے حوالے کرتے ہیں، طورخم سرحد کورونا وائرس کی روک تھام کے سلسلے میں 16 مارچ سے بند تھی۔دوسری جانب چمن میں بھی باب دوستی کے راستے پاک افغان یکطرفہ ٹریڈ بحال کردی گئی ہے، یہ سہولت ہفتہ میں تین دن فراہم کی جائے گی۔کسٹم حکام کے مطابق آج ایکسپورٹ کے30 ٹرک خوردنی اشیاء، سبزی اور فریش فروٹ لے کر سرحد پار جائیں گے جبکہ افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کے 70 کنٹینرز بھی افغانستان جائیں گے۔ٹرکوں اور کنٹینرز پر حفاظتی اسپرے کیا گیا، باب دوستی پر پاکستانی ٹرکوں اور کنٹینرز کو افغان ڈرائیوروں کے حوالے کیا جارہا ہے، افغانستان جانے والے گڈز ٹرکوں کی واپسی کا طریقہ کار کل طے کیا جائے گا۔

50% LikesVS
50% Dislikes

Leave a Reply