نیویارک: پاکستانی نوجوان نے والد کو ذبح کر دیا

امریکی ریاست نیویارک کے علاقے بروکلن میں ایک پاکستانی نژاد نوجوان نے اپنے باپ کو قتل کر کےنعش کے ٹکڑے کر دیے۔نیویارک پوسٹ کے مطابق ملزم نے اپنے باپ پر چھری کے وار کیے، گردن کاٹی اور آنتیں نکال دیں اور بعد ازاں خود کو پولیس کے حوالے کیا۔نیویارک پوسٹ نے پولیس کے حوالے سے بتایا کہ 26 سالہ نوجوان عماد احمد نے رات گئے اپنے باپ 57 سالہ خالد احمد کو چھری کے وار کرکے قتل کیا اور باپ کی نعش کے ٹکڑے کیے۔قتل کرنے کے بعد ملزم خون آلود کپڑوں میں ہی گھر کے قریب واقع بیگل اسٹور پہنچا اور خود کو وہاں موجود پولیس افسروں کے حوالے کیا۔پولیس کی مطابق بظاہر حماد احمد کورونا کی وجہ سے شہر میں لاک ڈاؤن کے باعث شدید اضطراب کا شکار لگتا ہے اور اپنے والد کے ساتھ گھر میں مقیم تھا۔بروکلن میں ہی چند سال قبل بھی ایک امریکن پاکستانی نوجوان نے گھریلو جھگڑے پر اپنے باپ کو قتل کردیا تھا جبکہ ایک پاکستانی نوجوان نے اپنی بیوی کو قتل کیا تھا۔یاد رہے کہ بروکلن کے علاقے میں ہی ایک پاکستانی نژاد سترہ سالہ نوجوان نے ایک پاکستانی امریکن لڑکی سے عشق میں مبتلا ہونے اور لڑکی کے باپ کی وجہ سے بروکلن کے مشہور ویرو زونا پل سے دریائے ہڈسن میں چھلانگ لگا کر خودکشی کی تھی

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں