کوئٹہ میں لاپتہ افراد کی بازیابی کے حوالے سے کمیشن نے 46 کیسز کی سماعت کی

کوئٹہ:کوئٹہ میں لاپتہ افراد کی بازیابی کے حوالے سے کمیشن نے تیسرے روزسترہ لاپتہ افراد کے کیسز کی سماعت کی،سماعت کے دوران کوئٹہ سے تعلق رکھنے والے ایک لاپتہ شخص کے بازیاب ہونے کی تصدیق ہوگئی جبکہ گوادر کے ایک لاپتہ شخص کا کیس لاپتہ افراد کے زمرے میں نہ آنے کی بنا پر خارج کردیا گیا۔محکمہ داخلہ کے مطابق کوئٹہ کے سول سیکرٹریٹ میں لاپتہ افراد کی بازیابی کے حوالے سے قائم کمیشن بلوچستان ہائی کورٹ کے سابق جج جسٹس ریٹائرڈ فضل الرحمان کی سربراہی میں کیسز کی سماعت کررہا ہے،کمیشن نے تیسرے روز 17 لاپتہ افراد کے کیسز کی سماعت کی سماعت کے دوران کوئٹہ سے لاپتہ ہونے والے ایک شخص کے بازیاب ہونے کی تصدیق اس کے اہل خانہ نے کردی جبکہ گوادر سے تعلق رکھنے والے ایک لاپتہ شخص کا کیس لاپتہ افراد کے زمرے میں نہ آنے کی بنا پر خارج کردیا گیاکمیشن تین روز کے دوران 46لاپتہ افراد کے کیسز کی سماعت کرچکا ہے،اس دوران دو لاپتہ بازیاب ہوئے جبکہ دو ہی لاپتہ افراد کے زمرے میں نہ آنے کی بنا پر خارج کردئیے گئے،لاپتہ افراد کے حوالے سے کمیشن کی سماعت چھ مارچ تک جاری رہے گی، پانچ روزہ سماعت کے دوران مجموعی طورپر67لاپتہ افرادکے کیسزسنے جائیں گے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں