گوادر کے مکینوں کو 1.2 ملین گیلن یومیہ پینے کے صاف پانی کی فراہمی کے منصوبے پر کام جاری

گوادر (انتخاب نیوز) چیئرمین گوادر پورٹ اتھارٹی پسند خان بلیدی نے کہا ھے کہ گوادر شہر کے مکینوں کو 1.2 ملین گیلن یومیہ پینے کے صاف پانی کی فراہمی کے لیے واٹر ڈی سیلینیشن پلانٹ کی تعمیر پر کام تیزی سے جاری ہے اس منصوبے کا اب تک 75 فیصد کام مکمل ہو گیا ان خیالات کا اظہار انہوں زیر تعمیر واٹر پلانٹ کے دورے کے موقع پر بریفنگ کے دوران بات چیت کرتے ہوئے کیا ھے اس موقع پر پرواجیکٹ کے ڈپٹی ڈائریکٹر انجینئر عبدالوحد بلوچ نے چیرمین کو تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ،1.2 ملین گیلن یومیہ پینے کے صاف پانی کی فراہمی کیلئے واٹر ڈی سیلینیشن واٹر پلانٹ چین کی جانب سے2 ارب روپے کی خطیر گرانٹ سے مکمل کیا جا رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ زیر تعمیر واٹر پلانٹ پرواجیکٹ 1.2 ملین گیلن یومیہ واٹر ڈی سیلینیشن پلانٹ کی تعمیر کے ساتھ ساتھ گوادر پورٹ اتھارٹی پلانٹ سے گوادر شہر کے مین واٹر سپلائی نیٹ ورک تک تقریباً 1 کلومیٹر طویل واٹر سپلائی لائن بچھانے کیلئے بھی پیشرفت کررہی ھے اور پائپ لائن بچھائی کاکام بھی تیزی سے جاری ہے جس کے ذریعے گوادر کے رہائشیوں کے گھروں کے اندر نلکوں میں پینے کا صاف پانی فراہم کیا جا سکے گا انھوں نے کہا کہ 1.2 ملین گیلن یومیہ ڈی واٹر ڈی سیلینیشن پلانٹ تقریباً ایک ایکڑ پر پھیلا ہوا ہے،اس پلانٹ پر جس رفتار سے کام جاری ہے امید ھےاپریل 2023 مکمل مکمل ہو جائے گا۔انہوں نے کہا کہ واٹر ڈی سیلینیشن پلانٹ گوادر پورٹ اتھارٹی اور چائنا ہاربر انجینئرنگ کمپنی کے تعاون سے مکمل کیا جا رہا ہے،یہ پلانٹ منصوبہ گوادر شہر اور گوادر بندرگاہ کی پانی کی طلب کو پورا کرنے کے لیے کافی ہوگا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں