ارب پتی چینی سرمایہ کار اور بینکر باﺅفین پراسرار طور پر غائب، کوئی رابطہ نہیں

بیجنگ (مانیٹرنگ ڈیسک ) چین کے ارب پتی سرمایہ کار بینکر باو¿ فین پراسرار طور پر غائب ہوگئے ہیں۔ یہ بات ان کے قائم کردہ بینک (سی آر ایچ) کی جانب سے ہانگ کانگ ایکسچینج میں جمع کرائی گئی دستاویزات میں بتائی گئی۔ بینک کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا کہ ہمیں باو¿ فین کی عدم دستیابی کے بارے میں کچھ علم نہیں اور گزشتہ چند دن سے ان سے رابطہ نہیں ہوسکا۔ بیان میں یہ نہیں بتایا گیا کہ باو¿ فین کو غائب ہوئے کتنا عرصہ ہوچکا ہے، مگر میڈیا رپورٹس کے مطابق باو¿ فین 2 دن سے اپنے دفتر نہیں آئے اور ان سے رابطے کی کوششیں بھی ناکام ثابت ہوئیں۔ رپورٹس میں بتایا گیا کہ سی آر ایچ کے صدر کونگ لین کے خلاف ستمبر 2022 سے تحقیقات کی جا رہی ہے۔ باو¿ فین کا شمار چین کی ٹیکنالوجی صنعت کے اہم ترین ڈیل میکرز میں ہوتا ہے جو متعدد بڑی کمپنیوں کے معاملات کی نگرانی کرتے ہیں۔ انہوں نے امریکی کمپنی مورگن اسٹینلے میں ایک بینکر کے طور پر کیرئیر کا آغاز کیا تھا اور 2005 میں سی ایچ آر کی بنیاد رکھی تھی۔ خیال رہے کہ اس سے قبل بھی چین میں چند بڑے سرمایہ کار پراسرار طور پر گمشدہ ہوئے اور کئی ماہ یا سال بعد دوبارہ سامنے آئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں