وڈیر ہ عبدالخالق موسیانی کی رحلت ناقابل تلافی نقصان ہے،میر یونس عزیز زہری

خضدار:جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی کونسل کے ممبر و رکن بلوچستان اسمبلی میر یونس عزیز زہری نے کہاہے وڈیر ہ عبدالخالق موسیانی کی رحلت نہ صرف جھالاو ان بلکہ پورے بلوچستان و ملک کے لیئے ناقابل تلافی نقصان ہے۔ وڈیرہ عبدالخالق موسیانی کی پوری زندگی جرات و بہادری، پیار بھرے پیغام اور کردار و عمل سے عبارت تھی۔ انہوں نے اپنے دورِ زندگی میں سیاسی قبائلی اور سماجی لہذ سے جو کردار نبہایا وہ اپنی مثال آپ تھے۔ نہ انہوں نے خوف کو قریب آنے دیا نہ کسی کے سامنے جھکے اور نہ ہی کبھی ارادے بدلے انہوں نے ہمیشہ مردِ آہن کی طرح مشکل حالات کا جوانمردی سے مقابلہ کیا اور اپنے ساتھی و رفقا کو بھی یہی حوصلہ و پیغام اور سبق دیا۔ وڈیرہ عبدالخالق موسیانی مردِ جری مردِ حر تھے جو ہمیشہ اپنے چاہنے والوں کے لیئے بطور رہنما اور آئیڈل بنے رہے۔ وڈیرہ عبدالخالق موسیانی عالم دین نہیں تھے تاہم ان کی علما اور علما کی جماعت سے والہانہ عقیدت بھی ان کی شان اور ان کا طرہ امتیاز تھا۔ آپ کمال کے بھادر دلیر انسان تھے حق اور سچ کے اوپر ثابت قدم رہنا کوئی آپ سے سیکھے اور آپ کی راہ پر چلے۔ سیاسی معاملات ہوں یا قبائلی معاملات آپ نے خوف کو کبھی بھی قریب آنے نہیں دیا ہمیشہ فرنٹ لائن اور رہنمائی کا کردار ادا کرتے رہے یہی وجہ ہے کہ لوگ آپ سے کافی متاثر اور مانوس تھے۔ وڈیرہ عبدالخالق موسیانی کی پیار و محبت اور اپنائیت دل کو لبہانے والی تھی چھوٹے اور بڑوں سے یکساں شفقت رکھتے اور اپنی الفت سے متاثر کرتے۔ ان کی دنیا سے کوچ کرجانا سب کے لئے ایک ناقابل تلافی نقصان ہے وڈیرہ عبدالخالق موسیانی کی یادیں بہادرانہ و دلیرانہ کردار ہمیشہ تاریخ کا حصہ رہیں گی اور یاد رکھی جائیگی وڈیرہ عبدالخالق موسیانی کی مشن کو ان کے چاہنے والے آگے بڑھائیں گے اور یہ کاز و پیغام آگے بڑھتا رہے گا اللہ تعالی سے دعا ہے کہ انسان دوست رہنما وڈیرہ عبدالخالق موسیانی کی مغفرت اور ان کی سفر آخرت کو آسان فرمائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں