بلوچستان میں متعدد امراض کا علاج مہنگا ہونے سے 70 فیصد بچوں کی علاج تک رسائی نہیں، ماہرین امراض

کوئٹہ :طبی ماہرین انڈس ہسپتال کے ڈاکٹر شمویل اشرف، ڈاکٹر عبدالقادر پٹھان ،ڈاکٹر ایوب بادینی کا کہنا ہے کہ بلوچستان میں بچوں میں سرطان کی بیماری کے علاقہ موذی امراض کا علاج مہنگا ہونے کی وجہ سے 70فیصد بچوں کی رسائی علاج تک نہیں ہو پاتی بروقت مرض اور سرطان کی تشخیص کے باعث اس بیماری کا علاج ممکن ہے، ہم سب کو اس حوالے سے اپنا کردار ادا کرنا ہوگا، ان خیالات کا اظہار انہوں نے شیخ خلیفہ بن زید ہسپتال کوئٹہ میں بچوں میں سرطان کی بیماری کے عالمی دن کے موقع پر منعقدہ واک اور سیمینار سے اظہار خیال کرتے ہوئے کیا، شیخ خلیفہ بن زید ہسپتال میں انڈس ہسپتال اینڈ ہیلتھ نیٹورک کے پیڈیاٹرک آنکولوجی یونٹ کی جانب سے بچوں کے کینسر کا عالمی دن منایا گیا جس میں ہسپتال کے ڈاکٹرز، پیرا میڈیکل سٹاف اور مریضوں نے بھی شرکت کی اس دن کو منانے کا مقصد بچوں میں پائے جانے والے کینسر کی اقسام، ان کی علامات اور کینسر ہو جانے کی صورت میں اس کے علاج کے بارے میں زیادہ سے زیادہ آگاہی پھیلانا ہے۔ پاکستان میں ہر سال تقریباً 10,000 بچوں میں کینسر کی تشخیص ہوتی ہے۔ لیکن مہنگا علاج، رسائی کی کمی کی وجہ سے تشخیص شدہ تقریباً 70 فیصد بچے یا تو علاج ترک کر دیتے ہیں یا علاج شروع کرنے کے بعد زیادہ عرصے تک زندہ نہیں رہ پاتے ڈاکٹر عبدالقادر پٹھان، سینئر کنسلٹنٹ پیڈیاٹرک آنکولوجسٹ نے کہا کہ "انڈس ہسپتال اینڈ ہیلتھ نیٹ ورک کینسر کے تمام بچوں کو مفت علاج فراہم کرکے قیمتی جانوں کو بچانے کیلئے پرعزم ہے۔2014 سے اب تک انڈس ہسپتال اینڈ ہیلتھ نیٹورک کی پیڈیاٹرک آنکولوجی سروس نے پاکستان بھر سے 12,000 سے زائدبچوں کا کینسر اور خون کی بیماریوں کا علاج کیا ہے۔انڈس ہسپتال کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر، میڈیکل سروسز ڈائریکٹوریٹ ڈاکٹر شمویل اشرف نے شیخ زید ہسپتال، کوئٹہ میں کام کرنے والے IHHN کے پیڈیاٹرک آنکولوجی یونٹ کے تمام اسٹاف کو خراج تحسین پیش کیا ۔ پیڈیاٹرک آنکولوجی یونٹ 2021 میں حکومت بلوچستان کے ساتھ پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے تحت قائم کیا گیا۔یہ یونٹ بلوچستان بالخصوص کوئٹہ کے رہائشیوں کو ان کی دہلیز پر مفت، معیاری کینسر کا علاج فراہم کر رہا ہے۔ اس یونٹ کے قیام سے پہلے، بلوچستان کے مریضوں کو دیکھ بھال کے لیے کراچی جانا پڑتا تھا۔ڈاکٹر شمویل اشرف، ایگزیکٹو ڈائریکٹر، میڈیکل سروسز ڈائریکٹوریٹ، ڈاکٹر عبدالقادر پٹھان، سینئر کنسلٹنٹ پیڈیاٹرک آنکولوجسٹ، اور ہسپتال کے ڈاکٹروں، نرسوں، عملے، مریضوں اور ان کی دیکھ بھال کرنے والے اور شیخ زید ہسپتال کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر ایوب بادینی بھی اس موقع پر موجود تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں