لیبیا کے سابق نائب وزیراعظم کو بدعنوانی کے الزامات میں گرفتار کر لیا گیا

طرابلس(شِنہوا)لیبیا کے اٹارنی جنرل دفتر نے مالی بدعنوانی کے الزامات کی تحقیقات کیلئے سابق نائب وزیراعظم اور وزیر داخلہ الصدیق عبدالکریم کریم کو زیرحراست رکھنے کا اعلان کیا ہے۔دفتر نے ایک بیان میں کہا کہ کریم جو صدارتی امیدوار بھی ہیں، انہوں نے آڈٹ بیورو کی اجازت کے بغیر ناقص معیار اور زیادہ قیمتوں کے ساتھ اشیائے ضروریہ کی فراہمی کے معاہدوں پر دستخط کیے ہیں۔ان معاہدوں پر ملک کے 1 ارب 25 کروڑ 70 لاکھ لیبیائی دینار سے زائد(27 کروڑ 30 لاکھ امریکی ڈالر) سے زائد رقم لگی ہے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ دریں اثنا مدعاعلیہ نے عوامی فنڈز جمع کرنے کے مقصد سے قانون کی خلاف ورزی اور عہدے کے اختیارات کا غلط استعمال کرتے ہوئے اپنے ایک دوست کی مدد کی۔ مزید بتایا کہ اس اقدام کے نتیجے میں 23 کروڑ دینار(5 کروڑ ڈالر) کا نقصان ہوا۔دو دن پہلے ہی اٹارنی جنرل کے دفتر نے وزیر ثقافت مبروکہ عثمان کو مالی بدعنوانی کے الزام میں گرفتاری کے چند دن بعد رہا کیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں