چیئرمین ایف بی آر کی ادویات کی قیمتوں میں اضافہ نہ ہونے کی یقین دہانی

اسلام آباد:چئیرمین ایف بی آر نے ادویات کی قیمتوں میں اضافہ نہ ہونے کی یقین دہانی کروا دی۔ تفصیلات کے مطابق فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر)کے چیئرمین نے کہا کہ ادویات کی قیمتوں میں اضافہ نہیں ہوگا اور ادویات والے شعبے کو ریفنڈ بروقت ملے گا۔ انہوں نے یہ اظہار خیال سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کے اجلاس میں کیا، اس اجلاس میں چیئرمین ایف بی آر اشفاق احمد نے بھی شرکت کی۔اجلاس کے دوران چیئرمین ایف بی آر نے بتایا کہ ٹیکس فری سلائی مشین کی درآمد کو مس یوز کیا جارہا ہے۔ اس پر فاروق ایچ نائیک نے کہا کہ اس کو روکنا ایف بی آر کا کام ہے، سلائی مشین پر سیلز ٹیکس سے عام آدمی کی مشکلات میں اضافہ ہوگا، امیر لوگ تو بوتیک جاتے ہیں لیکن غریب اب بھی اپنے کپڑے خود سیتا ہے۔چیئرمین ایف بی آر نے اجلاس کے شرکا کو آگاہ کیا کہ آئی ایم ایف کہتا ہے تیزی سے ریفنڈ دیں اورغریبوں کو ڈائریکٹ سبسڈی دیں، رہ جانے والی زرعی اشیا پر بھی سیلز ٹیکس عائد کیا جائے گا اور سیلز ٹیکس میں تمام فرق کو آئندہ 5 ماہ میں ختم کردیا جائے گا۔ایف بی آر 48 گھنٹے میں ریفنڈ دے رہا ہے اور اس کا ریفنڈ نظام 98 فیصد درستگی پر چل رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ادویات کی قیمتوں میں اضافہ نہیں ہوگا اور ادویات والے شعبے کو ریفنڈ بروقت ملے گا۔ خیال رہے کہ اس سے قبل ایف بی آر نے کسی بھی چیزکی پرچون قیمت پرسیلزٹیکس عائد کرنے کا اختیارمانگا تھا۔ سینیٹ کی قائمہ کمیٹی خزانہ کے اجلاس میں ایف بی آر حکام نے بتایا کہ نئی ترامیم کے ذریعے ایک ہزار گز سے کم دکان پر بھی پی او ایس لگانا پڑے گا کیونکہ کئی بڑے کاروبار چھوٹی دکان سے کیے جارہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں