یو این ایچ سی آر کی4لاکھ افغان مہاجرین کے ڈیٹا کی تصدیق

کوہاٹ:اقوام متحدہ کے ادارے برائے مہاجرین (یو این ایچ سی آر)نے ملک بھر میں 14 لاکھ رجسٹرڈ افغان مہاجرین کے ڈیٹا کی تصدیق، اپ ڈیٹ کرنے اور انہیں سمارٹ شناختی کارڈ جاری کرنے کے لیے ملک گیر مہم ختم کردی جس کے دوران 7 لاکھ سے زائد افغان مہاجرین کو سمارٹ کارڈ جاری کئے گئے۔ یہ مہم 15 اپریل 2021 سے شروع ہوئی تھی جو کئی ماہ جاری رہ کر گزشتہ ہفتہ31 دسمبر 2021 کو اختتام پذیر ہوئی۔ اقوام متحدہ کے ادارے نے مہم کے لئے حکومت پاکستان کے اقدامات کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ گزشتہ دس سالوں میں ملک میں مقیم افغان مہاجرین کی یہ پہلی بار بڑے پیمانے پر تصدیق کرنے کی مہم تھی۔ اس مقصد کے لئے ملک بھر میں 40 مراکز قائم کئے گئے تھے جبکہ موبائل وین پر مشتمل ٹیمیں الگ تھیں۔ ادارے کے مطابق ابتدائی عارضی نتائج کے مطابق، مہم کے نتیجے میں ساڑھے 12 لاکھ سے زائد افغان پناہ گزینوں کے ڈیٹا کو اپ ڈیٹ کیا گیا جن میں پانچ سال سے کم عمر کے 200,000 بچے بھی شامل ہیں۔ بچوں کے والدین نے انہیں رجسٹر کیا۔ ادارے کے بیان کے مطابق اب تک افغان مہاجرین کو 700,000 سے زائد نئے سمارٹ شناختی کارڈ جاری کیے جا چکے ہیں جبکہ باقی کارڈز 2022 کے اوائل میں پرنٹ ہوکر افغان مہاجرین میں تقسیم کردیئے جائیں گے۔ 30 جون 2023 تک کارآمد ہونے والے ان سمارٹ کارڈ میں بائیو میٹرک ڈیٹا شامل کیا گیا ہے اور یہ پاکستان میں شہریوں کی شناخت کی تصدیق کے لیے استعمال ہونے والے سسٹمز کے ساتھ تکنیکی طور پر ہم آہنگ ہیں۔ اقوام متحدہ کے ادارے برائے مہاجرین کے مطابق نئے سمارٹ شناختی کارڈ افغان مہاجرین کے لیے ایک ضروری شناخت اور تحفظ کا سبب ہیں جو انہیں صحت اور تعلیم کی سہولیات اور بینکنگ خدمات تک تیز تر اور محفوظ رسائی فراہم کرتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں