معدنی و زرعی وسائل سے مالا مال ہرنائی کو بنیادی سہولیات دی جائیں، آل پارٹیز ایکشن کمیٹی

ہرنائی : آل پارٹیز ایکشن کمیٹی کے جنرل سیکرٹری سید زاکر شاہ نے ایکشن کے کمیٹی کے عہدیداروں حاجی دوران، ملک ناظر شاہ، عبدالغنی ترین، نصراللہ ناز ترین، سید حفیظ شاہ ،فاضل خان ترین، میروائس شاہ کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ حکومت ضلع ہرنائی کے حل طلب مسائل کو حل کرنے کےلئے سنجیدگی کا مظاہرہ کرے ضلع ہرنائی قدرتی و زرعی وسائل سے مالا علاقہ ہونے کے باوجود اس جدید دور میں تمام بنیادی سہولیات سے محروم ہے سالانہ وفاق اور صوبے کو اربوں روپے مختلف ٹیکس کی مدمیں ضلع ہرنائی سے آمدن ملنے کے باﺅجود وفاق اور صوبائی حکومت کا ضلع ہرنائی کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک ہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے انہوں نے مطالبہ کیا ہے آل پارٹیز ایکشن کمیٹی کے گرفتار رہنماوُں صدام ترین اور سید یوسف شاہ کو فوری رہا کرنے اور مچھ جیل میں انکی ملاقات پر پابندی ختم کرنے ضلع ہرنائی میں پوری طورپر ڈپٹی کمشنر تعینات کیا جائے، ہرنائی ،کوئٹہ ، ہرنائی سنجاوی روڈ جس کی تعمیراتی کام کافی عرصے سے بند ہے پوری طورپر روڈ کی تعمیراتی کام دوبارہ شروع کیا جائے ،ہرنائی گریڈ اسٹیشن میں ہائی پاور ٹرانسفارمر کی تنصیب اور ا نسٹالیشن کیا جائے، ہرنائی پبلک لائبریری قائم کیا جائے ضلع ہرنائی میں امن وامان بحال کرنے، ہرنائی سبی سیکشن پر ٹرینوں کی آمد رفت کی بحالی، کول مائن پرغیر آئینی ٹیکس ختم کرنے ، زلزلہ زدگان کو اعلان شدہ امدادی رقم کی فراہمی ،ضلع ہرنائی کا سابقہ صوبائی حلقہ انتخاب کی بحالی ضلع ہرنائی لیڈی ڈاکٹرز کی فوری تعیناتی، گرلز کالج ہرنائی میں فیمیل اسٹاف کی فوری تعیناتی اور ضلع ہرنائی کے مختلف محکموں میں خالی اسامیوں کو پور کرکے ضلع ہرنائی کے مقامی نوجوانوں کی تعیناتی کیا جائے انہوں نے کہاکہ آل پارٹیز ایکشن کمیٹی کی جانب سے پیش کردہ مطالبات پر عمل درآمد نہ ہونے کی صورت میں آل پارٹیز ایکشن کمیٹی ضلع ہرنائی سخت احتجاجی تحریک کا باقاعدہ آغاز کریگی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں