بلوچستان میں حالیہ بارشوں سے20ہزار افراد بے گھر ،سینکڑوں مکانات منہدم

کوئٹہ :بلوچستان میں حالیہ بارش و برف باری سے 20ہزار افراد بے گھر سینکڑوں مکانات منہدم ہوئے ہیں،وزیراعلی عبدالقدوس بزنجو کی جانب سے گزشتہ روز تمام متاثرہ علاقوں میں ہرممکن سہولیات فراہم کرنے کے دعوی کے باوجود محکمہ پی ڈی ایم اے کی جانب سے تاحال متاثرہ علاقوں میں خوراک،خیمے اوردیگر اشیا نہ پہنچائی جاسکی۔ تفصیلات کے مطابق بلوچستان میں ایران سے نیا بارشوں کا طاقتور سسٹم داخل ہونے کا امکان ہے محکمہ موسمیات نے بلوچستان کے بالائی وشمالی علاقوں میں طوفانی بارشوں اور برف باری کی پیشن گوئی کی ہے، بلوچستان بھر میں حالیہ بارشوں سے 20ہزارسے زائد افراد بے گھر ہوئے جبکہ درجنوں مکانات منہدم ہوئے، ذرائع کے مطابق تربت اور گوادر کے ڈپٹی کمشنر زنے پی ڈی ایم اے کو ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لے ڈیمانڈ بھجوا دی لیکن پی ڈی ایم اے کی جانب سے تاحال سامان کی ترسیل ممکن نہیں بنائی جاسکی ہے،پشین،قلعہ عبداللہ،مسلم باغ سمیت دیگر علاقوں میں عوام امداد کے منتظر ہیں۔ ذرائع کے مطابق محکمہ پی ڈی ایم اے کی جانب سے تاحال متاثرہ علاقوں میں خوراک،خیمے اوردیگر اشیا نہ پہنچائی جاسکی۔ واضح رہے کہ وزیراعلی عبدالقدوس بزنجو کی جانب سے گزشتہ روز تمام متاثرہ علاقوں میں ہرممکن سہولیات فراہم کرنے کا دعوی کیا گیا تھا جبکہ صورتحال اس سے برعکس ہے جبکہ گوادر میں بارشوں سے متاثرین افراد نے ضلعی انتظامیہ گوادر کے خلاف احتجاج کرنے کا اعلان کردیا ہے۔سس

اپنا تبصرہ بھیجیں