آئل مارکیٹنگ کمپنیاں عوام کی مشکلات میں اضافے کا سبب بننے لگیں

کراچی (انتخاب نیوز) آئل مارکیٹنگ کمپنیاں عوام کی مشکلات میں اضافے کا سبب بننے لگیں، اوگرا کی جانب سے حکومت کو پیٹرول کی قیمت بڑھانے کی سفارش کے ساتھ ہی منافع خوری کے لئے اپنے ڈیلرز کو سپلائی روکنے کا انکشاف ہوا ہے، آل پاکستان پیٹرولیم اینڈ سی این جی فیڈریشن کے جنرل سیکریٹری سید ولی وارثی نے کہا کہ جب بھی اوگرا کی طرف سے حکومت پاکستان کو پیٹرول کی قیمت بڑھانے کی سفارش کی جاتی ہے تو تمام آئل مارکیٹنگ کمپنیاں ناجائز منافع خوری کے چکر میں اپنے ڈیلرز کو پیٹرول کی سپلائی روک دیتی ہیں جس کی وجہ سے اکثر پمپ خشک ہوجاتے ہیں اور پیٹرول کی عدم دستیابی کی وجہ سے عوام کو مشکلات کے ساتھ ذہنی کوفت کا بھی سامنا کرنا پڑتا ہے ، جن پمپوں پر پیٹرول دستیاب ہوتا ہے وہاں لمبی قطاریں لگ جاتی ہیں جبکہ دوسری جانب کمپنی کی اپنی سائٹ کو وافر مقدار میں پیٹرول مہیا کیا جاتا ہے۔ انہوں نے حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا کہ آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کو لگام دیتے ہوئے پیٹرول سپلائی کو تواتر کے ساتھ یقینی بنانے کا پابند کیا جائے تاکہ OMC’s کسی بھی صورت میں سپلائی نہ روکیں ، ولی وارثی کے مطابق بعض کمپنی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ عمران خان نے جو سبسڈی دی ہےوہ کمپنی والے ادا کررہے ہیں اس لئے سپلائی بند کی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں