لوگوں کی امداد اور لاک ڈاؤن کیلئے مناسب اقدامات وحکمت عملی نظرنہیں آرہی، ثناء بلوچ

کوئٹہ:بلوچستان نیشنل پارٹی کے رکن صوبائی اسمبلی ثناء بلوچ نے کہاہے کہ بلوچستان میں اگر چہ تمام شعبہ جات بدحالی کاشکار ہیں تاہم ماہی گیروں کی حالت زار بہتر بنانے کیلئے خصوصی امداد کی ضرورت ہے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں انہوں نے کہاکہ بدقسمتی سے بلوچستان میں تمام شعبہ انتہائی بدحالی کے شکارہیں عالمی وباء کورونا وائرس کے باعث صورتحال گھمبیر ہوگئی ہے مکران ڈویژن کی 30لاکھ آبادی کا گزربسر ایران اور ماہی گیری پر ہے،ان کو اس بدحالی سے بچانے کیلئے خصوصی امداد کی ضرورت ہے،انہوں نے کہاکہ بلوچستان میں لوگ بھوک سے مررہے ہیں لوگوں کی امداد اور لاک ڈاؤن کیلئے مناسب اقدامات وحکمت عملی نظرنہیں آرہی انہوں نے کہاکہ بلوچستان میں 95فیصد بجلی کے صارفین کو گھریلو اورزراعت کیلئے 6گھنٹے سے بھی کم بجلی کی سپلائی کی جاتی ہے۔یہاں دکانیں بند،روزگار اور زراعت ناپید ہیں۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں