کوئٹہ ٹو کراچی روٹ سنگل ہونے سے حادثات میں اضافہ

خضدار(انتخاب نیوز) خضدار قومی شاہراہ کوئٹہ ٹو کراچی سنگل روڈ ہونے کی وجہ سے آئے روز حادٹات رونما ہورہے ہیں روڈ پر ٹرالروں گاڑیوں کی تعداد میں دن بدن اضافہ قومی شاہراہ پر سفر کرنا بے چینی اور پریشان کن ہے قومی شاہراہ پر ٹرالروں کی بھرمار ایک سنگل شاہراہ کو استعمال کرنا روڈ ٹول ٹیکس سے بچنے کیلئے بھاگ کر اسی روٹ کو استعمال کررہے ہیں کئ قیمتی جانیں بھی ضائع ہوگیا ہے اسی سال کے شروع ہوتے ہی باراتیوں کے ویگن خوشی کے بجائے ماتم میں تبدیل ہوگئ جن میں سوار 9افراد جان کی بازی ہار گئ اور 15 سے زائد سواری زندگی اور موت کی کشمکش میں زیر علاج ہیں اس کے علاوہ گزشتہ شب چیئرمین سینیٹ کے چھوٹے بھائ ڈرائیور سمیت اسی قاتل شاہراہ کو لقمہ اجل بن گئے ہیں قومی شاہراہ پر موت کا رقص جاری ہے جتنے بھی حادثات رونماہورہے ہیں یہ سب ٹرالروں کی لاتعداد اضافہ اور رش کی وجہ سے ہورہے ہیں کوئٹہ ٹو کراچی قومی شاہراہ سے روزانہ ہزاروں ٹرالر گاڑی گزرتے ہیں سندھ جیکب آباد شاہراہ کے روٹ کو ٹیکس دینے کی وجہ سے استعمال نہیں کیا جارہا ہے عوامی حلقوں نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے گفتگو ہوئے کہا وزیراعلی بلوچستان چیف سیکٹریری بلوچستان کمشنر قلات ڈویژن قومی شاہراہ پر آئے روز موت کی رقص کو روکنے کیلئے ٹرالروں پر پابندی لگاکر عوام کو مزید موت کی آغوش سے بچائ جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں