بلوچستان 33 میں سے 29 اضلاع کورونا سے متاثر

کوئٹہ:بلوچستان کے مزید دو اضلاع سے کورونا کے مقامی منتقلی کے کیسز رپورٹ ہونے کے بعد ان اضلاع کی تعداد 27 سے بڑھ کر 29 ہوگئی ہے جہاں سے متاثرین سامنے آئے ہیں۔جن دو نئے اضلاع سے کورونا کے متاثرین سامنے آئے ہیں ان میں آواران اور صحبت پور کے اضلاع شامل ہیں۔ ان میں صحبت پور سے تین جبکہ آواران سے دو متاثرین رپورٹ ہوئے۔دوسری جانب جہاں بلوچستان کے 33 اضلاع میں سے 29 سے اب تک کورونا کے متاثرین سامنے آئے ہیں وہاں عید الفطر کے بعد سے مقامی منتقلی کے کیسز میں اضافے کا رجحان بھی برقرار ہے۔محکمہ صحت حکومت بلوچستان کی اعداد و شمار کے مطابق 23 جون تک بلوچستان میں کورونا متاثرین کی مجموعی تعداد 3306 تھی جن میں مقامی منتقلی کے کیسز 3150 (95 فیصد) تھے، تاہم عید کے بعد سات جون تک صرف 15 دنوں میں ان کی تعداد دگنی سے زیادہ ہوکر 6516 ہوگئی جن میں مقامی منتقلی کے کیسز 6368 (97 فیصد) ہیں۔کوئٹہ 5332 (83.7) متاثرین کے ساتھ سب سے آگے ہے جبکہ کوئٹہ کے بعد جن اضلاع سے زیادہ متاثرین رپورٹ ہوئے ہیں ان میں افغانستان سے متصل تین اضلاع قلعہ عبداللہ، پشین اور قلعہ سیف اللہ کے علاوہ دیگر اضلاع جعفر آباد، لسبیلہ، مستونگ اور خضدار شامل ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں