چمن، باب دوستی کی بندش، پاکستانی ڈرائیور افغانستان میں پھنس گئے

چمن:لاک ڈاؤن کاسلسلہ جاری باب دوستی بدستور بند خوردنی اشیاء کی دکانیں کھلی رہی ضلعی انتظامیہ کا گشت شہریوں کو ایک ساتھ بیٹھنے نہیں دیا گیا باب دوستی کی بندش سے تجارتی سرگرمیاں پیدل آمدروفت معطل نیٹوسپلائی،افغان ٹرانزٹ ٹریڈ معطل افغانستان میں پاکستانی ڈرائیور افغانستان میں پھنس گئے سوشل میڈیا پر ویڈیووائرس حکومت پاکستان سے فریاد ہماری داد رسی کیاجائے ۔ تفصیلات کے مطابق کروناء وائرس کی وباء نے سب کچھ معطل کردیا چمن شہرمیں بلوچستان حکومت کے اعلان کے بعد لاک ڈاؤن جاری جس سے کاروباری مراکز مکمل طورپر بند رہے اور صرف اشیاء خوردونوش کی دوکانیں کھلی رہی ضلعی انتظامیہ کی جانب سے کریک ڈاؤن جاری رہا اور شہرمیں سخت گشت جاری رہا اور کسی بھی جگہ مجمع کو اکھٹاکرنے نہیں دیاگیا جبکہ پاک افغان سرحد بدستور بند رہنے سے تجارتی سرگرمیاں معطل رہی جس کی وجہ چمن شہرمیں افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کے کنٹینرز اور نیٹو سپلائی مکمل طورپر معطل رہی جس سے ہزاروں ڈرائیور چمن میں پھنس گئے اور اس کے ساتھ ساتھ چمن کے راستے افغانستان کو نیٹو سپلائی اورافغان ٹرانزٹ ٹریڈ کے کنٹینرز پہنچانے والے ڈرائیور بھی افغانستان میں پھنس گئے جن کی ویڈیو گزشتہ روز سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی افغانستان کے علاقے ویش منڈی اور سپین بولدک میں بھی لاک ڈاؤن کے اعلانات ہوئے ہیں جس سے ڈرائیوروں کی زندگی مزید سخت ہوگی چمن شہرمیں لاک ڈاؤن کے باعث پاک افغان سرحد کی بندش سے چمن کی آبادی کا ایک بڑا حصہ مکمل طورپر بے روزگارہوگیاہے جن کیلئے مخیر شخص اورمشہور تاجر حاجی علی حیدر خان نورزئی نے مولاداد سلطان نورزئی کے ذریعے سینکڑوں گھرانوں کو پہلے سیشن میں خوردنی اشیاء پہنچایا جبکہ چمن کے شہریوں نے شہر کے مخیر افراد سے مزید امداد کی اپیل کی ہیں کیونکہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے علاقہ میں بے روزگاری کی شرح مزید بڑھ گئی ہے

50% LikesVS
50% Dislikes

Leave a Reply