بلوچستان میں اربوں روپے سے تعمیر 21 ڈیم سیلابی ریلوں کی نذر

کوئٹہ (انتخاب نیوز) بلوچستان میں حالیہ مون سون بارشوں کے بعد صوبے کے 21ڈیمز سیلابی ریلے کے نظر ہوگئے جو اربوں روپے کے لاگت سے بنائے گئے تھے لیکن کرپشن اور ناقص تعمیراتی مواد کے استعمال کی وجہ سے یہ ڈیمز ٹوٹ گئے تفصیلات کے مطابق اربوںروپے کی لاگت سے بننے والے 21ڈیمز سیلابی ریلے کی نذر ہوگئے۔بلوچستان میں سیلابی ریلے جہاں اپنے ساتھ مکان، فصلیں اور دیگر تعمیرات کو بہا لے گئے وہیں بلوچستان میں 5سال قبل بننے والے 21ڈیمز بھی سیلابی ریلوں کی نذر ہوگئے۔ڈیمز تعمیر کرنے والے کانٹریکٹرز ڈیمز ٹوٹنے کی وجہ بڑے پیمانے پر کرپشن کو قرار دیتے ہیں جب کہ موجودہ صوبائی حکومت نے ان الزامات کو مسترد کردیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں