کوئٹہ، عوام نے دفعہ 144کی دھجیاں اُڑادیں، جگہ جگہ شہریوں کا رش

کوئٹہ:عوام نے دفعہ 144 کی دھجیاں اڑادی،شہر میں 80 فیصد سے زیادہ ٹریفک چلنے لگا جگہ جگہ عوام کا رش لگا رہتا ہے انتظامیہ خواب خرگوش کے مزے لینے میں مصروف ہے کورناوائرس پھیلنے کا خدشہ ہے لاک ڈان کے باوجود حجام اور فوٹواسٹیٹ کے دوکان کھولیہوئے ہوتے ہیں جہاں انتظامیہ کاروائی کرنے سے مکمل قاصر ہے،، تفصیلات کے مطابق سرکی روڈ،گولمنڈی چوک،کواری روڈ،رحمت کالونی،اسپنی روڈ،کاسی روڈ، سمنگلی روڈ سریاب میں عوام نے کوروناوائراس کے وبا کے باعث لگے دفعہ 144 اور لاک ڈاون کے دھجیاں اڑادی ہے، عوام انتظامیہ کوچینلج کرتے نظر آتے ہیں، حجام، فوٹواسٹیٹ، گیراج ڈیکوریشن والے دوکان کھلے ہوئے ہیں جو کہ انتظامیہ کی سرپرستی میں پورے دن کھلے رہتے ہیں،جہاں پولیس اہلکار بھی ان کو کمپنی دینے کیلئے موجود رہتے ہیں، جبکہ دوسری جانب شہر میں گاڑیاں اور رکشوں کا رش لگا رہتا ہے،جن کے خلاف انتظامیہ کی جانب سے کوئی بھی کاروائی عمل میں نہیں لایا جاتا ہے، جو کہ افسوس ناک عمل ہے، عوامی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر کوئٹہ اور اے سی سٹی سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس سلسلے میں فوری کاروائی عمل میں لائیں اور دفعہ 144 کیخلاف ورزی کرنے والوں پر کاروائی کی جائے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں