پاکستان ڈیفالٹ میں نہیں ، ایسی کوئی صورتحال پیدا نہیں ،مصدق ملک

لاہور :وزیر مملکت برائے پٹرولیم مصدق ملک نے کہا ہے کہ پاکستان اس وقت ڈیفالٹ میں نہیں ہے ایسی کوئی صورتحال پیدا نہیں ،اس وقت ملک جن حالات سے گزر رہا ہے غریبوں کو ریلیف دینے کی ضرورت ہے، جو بوجھ غریب پر ڈالا گیا ہے وہ آنے والے وقت میں ختم ہوجائے گا، عمران خان ایک بات ٹھیک کرتے ہیں یہاں پر ایک نہیں دو پاکستان ہیں ایک پاکستان وہ ہے کوئی باپ اگر اپنے بچوں کے لئے روٹی چرائے تو پکڑا جاتا ہے دوسرا وہ پاکستان ہے جس میں گھڑیاں چوری کر کے گھر میں بیٹھا ہوا ہے، یہ دو مختلف ملک ہیں، عارف نقوی صاحب نے تین سو ساٹھ ملین روپے کا پلانٹ لگایا عمران خان کہتا ہے اپنے بچے جیلوں میں ڈال دے، ایک وہ پاکستان ہے جس میں عمران خان کہتا ہے لوگوں میرے گھر کے باہر آجاو¿ کہیں مجھے پکڑ نہ لیں، رات کی تاریکی میں باپ کے سامنے بیٹی کو ہتھکڑی لگائی گئی کہ دیکھ تم ہو گے وزیراعظم ہم لے کر جا رہے ہیں، ایک وہ پاکستان ہیں جس میں خان صاحب کو عدالت پوچھ رہی ہیں کیا خان صاحب! آپ آجائیں گے، ہم تمام آسائشوں پر ٹیکس لگائے گے، یہاں پر دو ملک بنائے جا چکے ہیں جن کو ختم کرنا ضروری ہے، حکومت نے اعلان کیا ہے کہ وہ غریب کے ساتھ کھڑی ہے، نئے پاکستان نہیں پرانے پاکستان کے ساتھ کھڑی ہے امیر کو ٹیکس دینا پڑے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے لاہور پریس کلب میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ بائیس کروڑ عوام کا ملک نہیں ہے چار یا چھ سرمایہ داروں کا ہے، کیا سیٹوں کو ستر سینٹ کے حساب سے بل دے رہے ہیں، وزیراعظم کا حکم ہے جتنی گیس ملے گی وہ پاور سیکٹر کو دیں، اگر انہی فیکٹریوں کو آنے والے وقت میں گیس دیں گے صحیح قیمت پر دیں گے، ہم آئی ایم ایف سے ایک بلین ڈالر لینے کے لئے مرے جارہے ہیں ہمارے لوگ ایک بلین ڈالر کی گاڑیاں منگوا رہے ہیں، صحیح کہتا ہے خان دو ہیں پاکستان، ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ ہم غریب کے پاکستان کے ساتھ کھڑے ہوں گے۔ وزیر مملکت نے معاشی بحران کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اس وقت ڈیفالٹ میں نہیں ہے ایسی کوئی صورتحال پیدا نہیں ہے، ایل سی کھلنے میں ضرور مشکل پیش آرہی ہے، ہم شاہد خاقان عباسی کے ساتھ کھڑے ہوئے ہیں، جب سے ہم آئے ہیں ایک بھی گیس کا میٹر نہیں لگا، ملک نہیں ایسے چل سکتا۔ انہوں نے مزید کہا کہ بریک ڈاو¿ن کی رپورٹ جلد عوام کے سامنے لے آئیں گے، اب ہم اس انڈسٹریز کو سپورٹ کریں گے، جو لوگ ملک کو ہائی جیک کرنے کی کوشش کریں گے ان کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے، سمال ٹو میڈیم سائز ینگ بچے بچیاں آگے آئیں گے ان کو ساتھ لے کرچلیں گے، روپیہ کمزور ہوتا ہے تو پٹرول کی قیمت بڑھتی ہے، گر ہم بین الاقوامی قیمت سے کم پر پٹرول بیچنے کی کوشش کریں گے تو ملک ڈیفالٹ ہوجائے گا۔ انہوں نے روس سے سستے تیل کی درآمد کے حوالے سے کہا کہ روس کے ساتھ معاہدہ مارچ کے آخر تک طے پا جائے گا، مئی تک گیس آنا شروع ہو جائے گی، حکومت کی کوشش ہے دس ہزار میگاواٹ سولر سسٹم میں شامل کیا جارہا ہے، آج کے بعد غریب آدمی کی گیس کی ٹیرف الگ ہوگی اور امیر آدمی کی الگ ہوگی، ساٹھ فیصد لوگوں کا ٹیرف گھٹا دیا گیا ہے، دس یونٹ امیر استعمال کرے گا دگنے پیسے دے گا غریب آدمی آدھے پیسے دے گا، امیر آدمی گیس استعمال کرنے کے اب تین گناہ زیادہ پیسے دے گا، چائے والا جب گیس استعمال کرے گا تو آٹھ سو روپے دے گا اور جب امیر استعمال کرے گا تو ڈھائی ہزار روپے دے گا۔ وزیر مملکت نے کہا کہ اس ملک کا مسئلہ ہے کہ ایک ہزار لوگ اس ملک پر قابض ہیں، حکومت کے تمام اداروں کی چھتوں پر سولر سسٹم لگانے جارہے ہیں، جن جگہوں پر ساڑھے چھ سو میگاواٹ سولر لگائے گے وہاں صحرا کی زمین ہے، کسی کو اس ملک میں اعتراض ہے امیر آدمی پر بوجھ ڈالا جارہا ہے ، سیٹھ کو اب ٹیکس دینا پڑیں گے۔ الیکشن کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ میرا تحریک انصاف کو پیغام ہے کہ الیکشن میں آ جائے، الیکشن کروانے کا فیصلہ الیکشن کمیشن نے کرنا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں