ایران میں کورونا سے بچاؤ کیلئے شراب پینے والے 44 افراد ہلاک

تہران:ایران میں کورونا وائرس سے بچاؤ کے لیے شراب پینے سے ہلاک افراد کی تعداد 44 ہو گئی۔ غیر ملکی خبر رساں ادراے کے مطابق لوگوں کی بڑی تعداد اس غلط اطلاع پر شراب پی کہ اس طرح وہ ایران میں بڑے پیمانے پر پھیلے کورونا وائرس سے محفوظ ہو جائیں گے لیکن شراب ان کے لیے زہر ثابت ہوئی۔ رپورٹ کے مطابق غیر قانونی شراب پینے سے سب سے زیادہ 36 ہلاکتیں ایران کے جنوب مشرقی صوبے خزیستان میں ہوئیں جو تین روز قبل تک زیستان میں کورونا وائرس کے باعث ہونے والی براہ راست 18 ہلاکتوں سے دو گنا زیادہ ہے۔زیستان کے علاوہ شراب پینے سے 7 ہلاکتیں شمالی علاقے البورز اور ایک کرمان شاہ میں ہوئی۔ ایران چین اور اٹلی کے بعد کورونا وائرس کے باعث سب سے زیادہ متاثر ہونے والا ملک ہے جہاں اب تک 354 افراد ہلاک اور 9000 متاثر ہو چکے ہیں۔ایران میں کورونا وائرس کے باعث رکن پارلیمنٹ فاطمی رہبر بھی ہلاک ہو چکی ہیں جب کہ ایران کی نائب صدر برائے خواتین میں بھی کورونا وائرس سمیت کئی اراکین پارلیمنٹ میں وائرس کی تصدیق ہو چکی ہے

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں