بلوچستان،اومی کرون کےمشتبہ مریضوں کی تعداد 32 تک پہنچ گئی

کوئٹہ:بلوچستان میں اومی کرون وائرس کے 32مشتبہ کیسز سامنے آگئے، محکمہ صحت کا کہنا ہے کہ مشتبہ افراد کے نمونے تصدیق کیلئے این آئی ایچ اسلام آباد بھیج دیئے گئے۔انچارج کووڈ آپریشن سیل ڈاکٹر نقیب اللہ نیازی کے مطابق اومی کرون کے مشتبہ کیسز بلوچستان کے ضلع قلات سے سامنے آئے ہیں، ان افراد میں کرونا وائرس کی تصدیق ہوئی جبکہ اومیکرون وائرس کا شبہ ہے۔

نقیب اللہ نیازی کا کہنا ہے کہ مريضوں کی ری سيمپلنگ جاری ہے، اس لیے اومي کرون ميں مبتلا ہونے کی باتيں قبل از وقت ہيں، صورتحال رپورٹس کے بعد واضح ہوگی۔انہوں نے کہا کہ 12 مريض قرنطينہ ميں ہيں جبکہ باقی کو تلاش کرکے قرنطينہ کر ديا جائے گا۔

محکمہ صحت کے حکام کا کہنا ہے کہ مشتبہ مریضوں کو قلات میں ہی قرنطینہ کرکے ان کے نمونے تصدیق کیلئے این آئی ایچ ڈی اسلام آباد بھجوا دیئے گئے ہیں، جن کی رپورٹ چند روز میں موصول ہو جائے گی۔انہوں نے کہا کہ رپورٹ موصول ہونے کے بعد ہی اومی کرون وائرس کی موجودگی کی تصدیق ہو سکے گی۔حکام کے مطابق گزشتہ روز قلات سے کرونا وائرس کے 25 کیسز رپورٹ ہوئے تھے جبکہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کی شرح میں بھی کئی مہینوں بعد 5 فیصد سے زیادہ اضافہ ہوا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں