ایران کو راہ راست پر لانے کے لئے دباؤ برقرار رکھا جائے گا: مائیک پومپیو

دبئی:امریکہ کے وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے تمام ممالک سے مطالبہ کیا کہ وہ ایران کی جانب سے بین الاقوامی ایٹمی معاہدے کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لیں اور ایران سے اس بارے میں باز پرس کی جائے۔عرب میڈیا کے مطابق پومپیو نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں کہا کہ ایران کاایٹمی مواد سے متعلق رپورٹس فراہم نہ کرنا جوہری عدم پھیلاؤ معاہدوں کی براہ راست خلاف ورزی ہے۔مائیک پومپیو نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل سے ایران پر عائد بین الاقوامی اسلحہ پابندی کی تجدید کے لیے کام کرنے کا مطالبہ کیا اور ساتھ ہی ایران سے بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی کے ساتھ تعاون کرنے پر زور دیا۔
امریکی وزیر خارجہ پومپیو نے کہا کہ ایران کو اپنی تمام تر تنصیبات IAEA کے تفتیش کاروں کے لیے کھولنی چاہئیں اور اسے عالمی توانائی ایجنسی کے حوالے سے اپنی ذمہ داریوں کیہرحالت میں پابندی کرنی چاہیے۔انہو ں نے کہا کہ ایران کو راہ راست پر لانے کے لئے دباؤ برقرار رکھا جائے گاپومپیو نے مزید کہا کہ تہران کو ایٹمی پروگرام کے بارے میں جھوٹ بولنے سے باز آنا چاہیئے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایران کرونا وائرس کے پھیلاؤ کو چھپانے کے لیے بھی جھوٹ بول رہا ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں