بھارت میں کورونا کیسز میں اضافہ،وزیراعلیٰ دہلی بھی شکار،نئی پاپندیاں نافذ

نئی دہلی:بھارت میں عالمی وبا کورونا وائرس کیسز بڑھنے پر پابندیاں نافذ کردی گئیں۔بھارتی میڈیا کے مطابق کورونا کیسز بڑھنے پر ریاست تلنگانہ میں 8 جنوری سے 16جنوری تک اسکول بند کردیئے گئے ہیں جبکہ ممبئی میں کورونا میں اضافے کے سبب اسکول بند کردیئے گئے۔بھارتی ریاست پنجاب کے کچھ علاقوں میں رات کا کرفیو نافذ کردیا گیا ہے جہاں پر بازار، سنیما، مالز اور ریسٹورنٹس پر 50 فیصد افراد کو اجازت دی گئی ہے۔بھارتی میڈیا کا یہ بھی کہنا تھا کہ پنجاب میں جم بند رہیں گے جبکہ مکمل ویکسین شدہ افراد دفتر جاسکیں گے۔بھارتی وزارت صحت کا کہنا تھا کہ بھارت میں گزشتہ روز کورونا کے 37 ہزار 379 کیسز اور 124 اموات رپورٹ ہوئیں۔بھارتی میڈیا کا کہنا تھا کہ بھارت میں اومی کرون ویرینٹ کے کیسز کی تعداد 1892 تک پہنچ گئی ہے۔بھارتی رکن پارلیمنٹ منوج تیواری کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے جبکہ یونین وزیر مہندرا ناتھ پانڈیبھی کورونا میں مبتلا ہوگئے۔دہلی کے وزیراعلی اروند کیجروال کا بھی کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے، ان میں کورونا کی معتدل علامات ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں